Sunday, November 2, 2014

ملک ریاض حسین کی کامیابی کا راز




ملک ریاض حسین چئیرمین بحریہ ٹاون کون ہے یہ شاید کسی کو بتانے کی ضرورت نہیں۔مگر انکی کامیابی کا راز جاننا اور سمجھنا شاید ضروری نہ سہی مگر بہت سے لوگوں کی کامیابی کے لیے شاید ضروری ہے۔ملک ریاض ھمیشہ سے خبروں میں رہتے ہیں کبھی پاکستانیوں پر آنے والی کسی بھی مصیبت کی گھڑی میں کروڑوں روپے دینے کی خبریں تو کبھی حکومت اور کبھی اپوزیشن کی جانب سے آنے والے الزامات کی صورت میں اور ہر بار الزام ثابت نہیں ہو پاتے۔آخریہ سارے الزام لگتے اور ثابت کیوں نہیں ہوپاتے ؟ کچھ لوگوں کا خیال سے وہ لوگوں کو خرید لیتے ہیں تو کیا ایسا ممکن ہے کہ جن وزرا کے دستخطوں سے اربوں کھربوں یہاں سے وہاں ہوجاتے ہیں وہ ملک ریاض کی کروڑوں کی رشوت پے بک جائیں ؟ کبھی ملک ریاض حکومت کے دوست تو کبھی اپوزیشن کے دوست۔حکومت اور اپوزیشن میں موجود ارب پتی سیاستدانوں کو ملک ریاض کے پیسے کی ضرورت ہے نہ ہی اثررسوخ کی کہ سیاستدانوں کے پاس پیسے اور اثرورسوخ کی کمی نہیں ہوتی۔
صومالی قزاقوں سے پاکستانیو کو چھڑانے کے لیے تاوان کی ادائیگی ہو یا شمالی علاقہ جات میں آنے والے زلزلے یا پنجاب سندہ میں انے والے سیلاب شمالی وزیرستان میں ہونے والے آپریشن کے متاثرین ہرجگہ سب سے پہلے سب سے زیادہ امداد کا اعلان کرنے والے کوئی اور نہیں ملک ریاض ہوتے ہیں
اس وجہ سے ہی انکو بہت سارے اعزازات سے بھی دنیا نوازتی ہے اور انکے اپنے ملک میں ان پر بے جا تنقید بھی کی جاتی ہے جسے حال ہی میں انکو ایشیا کا بل گیٹس کا خطاب ملا کچھ لوگ سمجھتے ہیں کہ یہ اعزاز انکو انکی بے پناہ دولت کی وجہ سے دیا گیا مگر درحقیقت انکو یہ اعزاز بل گیٹس کی طرح انسانیت کے لے انکی بے پناہ خدمات پر دیا گیا شاید لوگ یہ بات نہیں جانتے کے پاکستان میں تین ہزار سے زائد لوگ ایسے ہیں جنکی ماہانہ آمدنی ایک کروڑ سے زیادہ ہے اور چار سو سے زیادہ افراد ارب اور کھرب پتی ہیں جن میں سے ۱۱۰ نمبر پر ملک ریاض کا نام آتا ہے مگر وہ تمام افراد چئیریٹی کے کاموں سے بہت دور ہیں کوئی ان میں سیاست کا کھلاڑی ہے اور کوئی عیاشی کا۔ملک ریاض چئیرٹی کے کھلاڑی بنے تو ان پر کچھ انکے مخالفین تنقید کرتے ہیں کہ یہ عوام کا پیسا ہے۔ان حضرات سے سوال ہے کیا انہوں کے کسی سے امداد کے نام پر پیسے لیے کبھی ؟ کسی سے فراڈ کرکے پیسے لیے ؟ کسی سے زبردستی پیسے لیے ؟ اگر عوام خود انکے پاس جاکر لائنوں میں لگ لگ کر بحریہ ٹاون کے پلاٹس خریدتی ہے تو اس میں ملک ریاض کا کیا قصور ہے ؟ پاکستان کو جن جن سیاستدانوں نے سرکاری افسران نے لوٹا ٹیکس چوری کرکے کھرب پتی بنے اور پھر وہ پاکستان پر آنے والی کسی بھی مصیبت میں کہیں نظر نہیں آتے ان پر تنقید کے بجائے ایک ایسے شخص پر تنقید کرتے ہیں جو نہ ٹیکس چور ہے نہ ملکی خزانہ لوٹنے والا نا ہی عوام کو بے وقوف بنا کر پیسے کمانے والا
ملک ریاض کی کامیابیوں کے پیچھے
شاید یا یقینا ایک بہت پرانا اور آزمودہ نسخہ ہے۔کہ جو آدمی اللہ کے بندوں پر مہربانی کرے اللہ اس پر اپنی مہربانی اور خزانے کے دروازے کھول دیتا ہے اور ملک ریاض کو جاننے والے اور میڈیا سے تعلق رکھنے والے لوگ یا باقائدہ اخبارات اور میڈیا دیکھنے والے لوگ اس بات کی گواہی دیں گے کہ جب بھی پاکستانیو پر کوئی آزمائش کی گھڑی آئی ملک ریاض سب سے پہلے لوگوں کی مدد کو آئے۔کیونکہ ملک ریاض کے بارے میں مشہور ہے کہ وہ کسی کو کبھی بھی انکار کردیتے ہیں مگر اللہ کے نام پر پھیلے ہاتھ کو انکار نہیں کرتے اور شاید یہ انکی کامیابی کا سب سے بڑا راز ہے

1 comment: